ہاں ایسی ہی ایک رات تھی

forums discuss Pakistani politics ہاں ایسی ہی ایک رات تھی

  • Creator
    Topic
  • #127912 0 Likes | Like it now
    Participant
    Participant
    Bedari
    • Topics:5
    • Replies:5
    • Contributions:10
    • Advance_user

    ۔۔۔۔۔۔۔۔ایسا ہی سماں تھا، یہ چاند بھی پورا تھا، زمانہ بھی جواں تھا 

    18 اور 19 اکتوبر 2020 کی درمیانی شب میں کراچی میں رات کے اندھیرے میں ۱۸ سالہ دوشیزہ کا اغوا

    رات کے دو بجے کچھ نامعلوم افراد ایک   ناتواں دوشیزہ کو اُس کی گھر سے اغوا کرنے آئے اور آخر کار دو گھنٹوں کی شدید جدوجہد کے بعد صبح کے چار بجے دوشیزہ کو اپنے قابو میں کرنے میں کامیاب ہوئے! اُس سے پہلے دو نا معلوم فرد دوشیزہ کی حفاظت پر معمور 20  گارڈز کو بھی قابو میں لائے!

    دوشیزہ کو کسی فارم پر لا کر اس کی عزت لوٹی گئی اور بعد میں باحفاظت واپس گھر پہنچا دیا گیا!

    ۳۵ گھنٹے بعد دوشیزہ کو اپنی عزت لوٹنے کی اطلاع ملی تو بجائے باغیرت دوشیزہ کے ہونے کے خودکشی کرتی، جو کہ عموماً ان حالات میں کی جاتی ہے، اُس نے واویلا مچا دیا اور شور مچایا، میں لٹ گئی، برباد ہوگئی!

    اس سارے واقعے کے اثرات اتنے گہرے تھے، کہ اُن کا ازالہ صرف کسی مضفاتی مقام پر جا کر چھٹیاں منا کر ہی کیا جا سکتا تھا! آخر ذہنی دباؤ سے بھی تو نکلنا تھا!

    جب محبوب کو اس سانحہ کی خبر ملی تو، وہ تو پہلے غش کھا کر گرا، بہت رویا دھویا اور پھر  اپنے آپ کو سنبھالتے ہوئے اپنی محبوبہ کی مدد کو دوڑا!

    اُس کو سمجھ نہیں آیا کہ کس کو مدد کے لئے پکارے اور پھر  سوچا کہ چوکیدار ہی سے پوچھا جائے اور مدد لی جائے!

    چوکیدار صاحب کو اُن دونوں کے دکھ کا احساس ہوا، دلاسا دیا، ہمت بندھائی اور مجرموں کا سراغ لگائے جانے کی یقین دھانی کی گئی!

    محبوب اس خبر سے خوش خوش خواب خرگوش میں چلا گیا۔ دیکھتا کیا ہے کہ، کیا زرق و برق لباس تن کیا ہواہے اور چوکیدار ہاتھ باندھے کھڑا ہے۔۔۔۔۔۔۔۔

    فلم ابھی باقی ہے، 

    پر ایک جھلک تو بنتی ہے!

    محبوب جب نیند سے اٹھا تو، خواب چکنا چور ہو چکا تھا!!!!!!

You must be logged in to reply to this topic.